Downloads        Co-Curricular Socities        Time Table        CMS        Attendance        ORIC                                                                       Tender        Auction        Career        Email        Contact Us       
GCWUF Logo


Government College Women University Faisalabad

One Day Seminar on “Mevlana Rumi & Allama Iqbal”

فیصل آباد () گورنمنٹ کالج ویمن یونیورسٹی شعبہ اُردو اور فارسی کے زیر اہتمام ” یک روح۔دوادوار ” رومی و اقبال ” کے موضوع پر ایک روزہ سیمینار کا انعقاد کیا گیاجس کی صدارت وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر روبینہ فاروق نے کی جبکہ تہران یونیورسٹی سے صدر شعبہ اُردو ڈاکٹر محمد کیو مرثی مہمان خصوصی تھے۔ سیمینار میں تہران یونیورسٹی سے ڈاکٹر علی کاؤسی، صدر شعبہ اردو گورنمنٹ کالج ویمن یونیورسٹی ڈاکٹر زمرد کوثر،صدر شعبہ فارسی مسز افشاں سعید، ڈاکٹر صدف نقوی، مسز خالدہ جلال فیکلٹی ممبران اور طالبات کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر روبینہ فاروق نے کہا کہ علامہ اقبال اور مولانا رومی ہمارے روحانی لیڈر ہیں اگر ہم ان کی تعلیمات پر عمل کر لیں تو بہت اچھے انسان بن سکتے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ علامہ اقبال نے اپنی شاعری کے ذریعے سوئی ہوئی قوم کو بیدار کیا اور ان کو غلامی سے آزادی اور الگ ملک کا تصور پیش کیا اب ہمیں اس امر کی ضرورت ہے کہ ہم بھی اپنے آنے والی نسلوں کے لئے ایک بہتر معاشرہ چھوڑ کر جائیں۔اس موقع پر تہران یونیورسٹی سے مہمان خصوصی ڈاکٹر محمد کیو مرثی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ علامہ اقبال پاکستان کے قومی شاعر ہیں جبکہ ہم ان کو اپنا قومی شاعر مانتے ہیں۔انہوں نے کہا ہمیں مولانا رومی اور اقبال کی تعلیمات پرعمل کرنے کی ضرورت ہے تاکہ ایک بہتر معاشرہ تشکیل پا سکے۔سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر علی کاؤسی کا کہنا تھا کہ علامہ اقبال نے ہمیشہ مولانا روم کو اپنا روحانی استاد مانا ہے اورعلامہ اقبال اور مولانا رومی کے تفکرات ملتے ہیں۔انہوں نے علامہ اقبال کا فارسی کلام بھی پڑھ کر سنایا۔اس موقع پر جی سی یونیورسٹی سے ڈاکٹر ظفر ھرل،ڈاکٹر علی کومیل ودیگر نے بھی خطاب کرتے ہوئے علامہ اقبال اور مولانا رومی کو خراج تحسین پیش کیا۔سیمینارسے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر صدف نقوی نے ایران سے آنے والے معزز مہمانوں کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ گورنمنٹ کالج ویمن یونیورسٹی اور تہران یونیورسٹی ایران کے مابین مفاہمتی یاداشت سے طالبات ریسرچ کے لئے تہران یونیورسٹی ایران جا سکیں گیں۔ سیمینار کے اختتام پر تمام معزز مہمانوں کوتحائف سے نوازہ گیا۔